قرآنِ کریم (قرآن مجید) کا اردو ترجمہ بمعہ عربی متن

از مولانا محمد علی

Urdu Translation of the Holy Quran

by Maulana Muhammad Ali

Surah 104: Al-Humazah (Revealed at Makkah: 9 verses)

(104) سُوۡرَۃُ الۡہُمَزَۃِ مَکِّیَّۃٌ

بِسۡمِ اللّٰہِ الرَّحۡمٰنِ الرَّحِیۡمِ

اللہ بے انتہا رحم والے ، بار بار رحم کرنے والےکے نام سے

وَیۡلٌ   لِّکُلِّ ہُمَزَۃٍ   لُّمَزَۃِۣ ۙ﴿۱﴾

۱۔ تباہی ہے ہر عیب لگانے والے طعن کرنے والے کے لیے

الَّذِیۡ جَمَعَ  مَالًا  وَّ عَدَّدَہٗ ۙ﴿۲﴾

۲۔ جو مال کو جمع کرتا ہے اور اُسے شمار میں لاتا ہے۔

یَحۡسَبُ اَنَّ مَالَہٗۤ  اَخۡلَدَہٗ ۚ﴿۳﴾

۳۔ وہ خیال کرتا ہے کہ اس کا مال اسے ہمیشہ رکھے گا۔

کَلَّا  لَیُنۡۢبَذَنَّ فِی الۡحُطَمَۃِ ۫﴿ۖ۴﴾

۴۔ ہرگز نہیں وہ ضرور حطمہ میں ڈالا جائے گا۔

وَ  مَاۤ  اَدۡرٰىکَ مَا  الۡحُطَمَۃُ ؕ﴿۵﴾

۵۔ اور تجھے کیا خبر ہے حطمہ کیا ہے؟

نَارُ اللّٰہِ الۡمُوۡقَدَۃُ ۙ﴿۶﴾

۶۔ اللہ کی جلائی ہوئی آگ،

الَّتِیۡ  تَطَّلِعُ  عَلَی الۡاَفۡـِٕدَۃِ ؕ﴿۷﴾

۷۔ جو دِلوں پرچڑھتی ہے۔

اِنَّہَا عَلَیۡہِمۡ  مُّؤۡصَدَۃٌ ۙ﴿۸﴾

۸۔ وہ اُن پر بند کردی جائے گی۔

فِیۡ  عَمَدٍ  مُّمَدَّدَۃٍ ٪﴿۹﴾

۹۔ لمبے لمبے ستونوں میں بند کردی جائے گی ۔

Top